مخصوص گروہ کے جانب سے بی ایس او کے تنظیمی اندرونی اختلافات سے فائدہ اٹھا کر پروپگنڈے کی کوششوں میں مصروف عمل ہے بی ایس او

Spread the love

کوئٹہ(نشست) بلوچ اسٹوڈنٹس آرگنائزیشن کوئٹہ زون کے ترجمان نے جاری کردہ بیان میں کہا ہے بی ایس او اداروں میں بدانتظامی بدعنوانی کرپشن و اقرباء پروری کے خلاف ہے گذشتہ روز اس حوالے سے بی ایس او کے مرکزی سیکرٹری جنرل منیر جالب بلوچ مرکزی جوائنٹ سیکرٹری شوکت بلوچ کا بیان تنظیم کے اصولی موقف کا حصہ ہے جسکے تحت بی ایس او نے احتجاجی کیمپ لگایا اور یونیورسٹی میں کرپشن بلیک میلنگ و لسانی تنگ نظری کے خلاف آواز بلند کیا یونیورسٹی ایشوز پر بی ایس او کوئٹہ زون تنظیم کے مرکزی عہدے داروں اور کابینہ کے پابند ہے ایک مخصوص گروہ کے جانب سے بی ایس او کے تنظیمی اندرونی اختلافات سے فائدہ اٹھا کر پروپگنڈے کی کوششوں میں مصروف عمل ہے جسکی کسی صورت اجازات نہیں دی جاسکتی تنظیمی اندرونی ایشوز بی ایس او کے بجائے کمزور کرنے کے مثبت تنقیدی رجحان پیدا کررہے ہے لیکن کسی کو بی ایس او کے دوستوں کے درمیان اختلاف پیدا کرنے اور مخالفت کی اجازت نہیں دینگے ۔
بیان میں مزید کہا گیا کہ بی ایس او انتظامی سطح پر بھی بلیک میلنگ کے خلاف اور کسی کو طلباء کے نام پر سیاست کرنے کے نام پر بھی تعلیمی اداروں میں اپنے بندوں کو پاس کرنے کی خاطر بلوچ ملازمین کی تذلیل کی اجازت نہیں دی جاسکتی نہ ہی فیل و پاس کرنے کے نام پر شعبہ امتحانات میں میرٹ کے برخلاف اقدامات کی اجازت دی جاسکتی ہم طلباء کے سنجیدہ اتحاد کے لئے کوشاں ہے لیکن کچھ عناصر محض طلباء کے نام پر شعبدہ بازی کرریے ہے جوکہ بھوک ہڑتالی کیمپ کے وقت سابقہ حکومتی پرست جماعت کے دور میں آئی سابقہ وائس چانسلر کو تحفظ بھی لسانی گروہ کے حمایت کے بنیاد پر کیا گیا بولان میڈیکل کالج و دیگر ایشوز پر بھی قوم پرست جماعت نے ایکٹ پاس کرکے بولان میڈیکل کالج کو لسانی گروہ کے حوالے کیا بی ایس او یونیورسٹی انتظامیہ میں موجود کرپٹ عناصر کے ساتھ طلباء کے نام پر بھی ادارے میں بلیک میلنگ کی اجازت نہیں دے گی ۔

جواب لکھیں

آپ کا ای میل شائع نہیں کیا جائے گا۔نشانذدہ خانہ ضروری ہے *

*

error: Content is protected !!