بنیادی صفحہ / اردو / دور جدید میں لائبریری کا فقدان

دور جدید میں لائبریری کا فقدان

تحریر: اظہر الدین بلوچ

موجودہ دور جو کہ ٹیکنالوجی کا دور ہے، جہاں دنیا نے مختلف ٹیکنالوجی متعارف کی ہے، ٹیکنالوجی کی مدد سے ہماری زندگی آسان بن گئی ہے، کمپیوٹر، موبائل، لیپ ٹاپ، دیگر سائنسی آلات، چاہے میڈیکل سے متعلق ہوں یا پھر ایجوکیشن سے متعلق ہوں بہت ساری آسانیاں پیدا ہوئی ہیں۔

ترقی یافتہ ممالک میں تو آج کل انسان کی جگہ انسانی مشینیں کام کرتی ہیں، کوئی بھی شاپنگ مال میں یا کوئی فیکٹری میں انسان نہیں بلکہ مشین کام کرتے ہیں، پہلے انسان ایک کام میں دس دن لگاتا تھا ابھی وہ کام ٹیکنالوجی کی مدد سے ایک گھنٹہ میں تیار ہوتا ہے۔

مگر سوچنے کی بات یہ ہے کہ یہ ٹیکنالوجی کہاں سے آئی ہے، یہ کوئی الہام نہیں ہے بلکہ یہ سوچنے سمجھنے اور عقل و شعور سے آئی ہے، جب عقل و شعور کی بات کرتے ہیں تو سوچنے کی شعور کتابوں سے ملتی ہے، اور ہمارے ہاں کتابوں کا فقدان ہے، ہمارے ہاں موبائل فون، اسلحے کی ہزاروں دکانیں ہیں مگر ایک دکان بھی کتاب کی نہیں، صرف دکان ہی نہیں بلکہ ہمارے ہاں تو لائیبریری ہی موجود نہیں ہے، کہ جس میں کوئی جاکر ایک کتاب پڑھے اور اسکی سوچنے کی شعور باہر نکل جائے۔

بلوچستان کی طرف رخ کرینگے تو وہاں چند گنے چنے لائیبریری نظر آئینگے جن میں اکثر طلبہ کو بیٹھنے کی جگہ نہیں ملتا، اور کوئی سہولیات موجود نہیں ہوتا، خضدار بلوچستان کا دوسرا شہر ہے مگر یہاں ایک لائیبریری بھی نہیں ہے، یہاں کوئی نہیں سوچتا، کوئی نہیں پڑھتا، اگر کوئی مطالعہ کرنا چاہے بھی اسکو مطالعے کے لئے پرسکون جگہ نہیں ملتا، ایک اگر لائیبریری بن گئی ہے بھی وہ ابھی تک ایک خالی بلڈنگ ہے، نہ جس میں فرنیچر ہے، نہ ہی کوئی بیٹھنے کی جگہ ہے۔

کسی بھی علاقے میں اگر لائیبریری نہیں ہوگا تو وہاں شعور کا فقدان ہوگا، سوچنے، سمجھنے، اور سننے کی صلاحیت موجود نہیں ہوگا جوکہ کسی بھی معاشرہ کے لئے ایک المیہ ہے، ہمیں اس المیہ سے نکلنے کے لئے اپنی مدد آپ کے تحت مطالعہ کرناچاہئیے اور شعوری سوچ کو بلند کرنا چاہئیے سماج کی ترقی میں اہم کردار ادا کرنا چاہیے، یہ انسان کی نا صرف سماجی بلکہ اخلاقی بھی فرض ہے۔

تعارف: nishist_admin

جواب لکھیں

آپ کا ای میل شائع نہیں کیا جائے گا۔نشانذدہ خانہ ضروری ہے *

*

x

Check Also

ایک شعوری سوال

تحریر : عامر نذیر بلوچ   کائنات میں ہمیشہ سے روایات چلتا ...

مختلف سوچ اقوام کی مضبوطی کا سبب ہے

تحریر: نعیم قذافی   انسان جسم و قد، رنگ یا دیگر اعتبار ...

چلو آو بیٹا افطاری کرتے ہیں

افسانہ نگار: شاد بلوچ امی، امی، امی… نوید کی چیخیں نکل رہے ...

اردو اور کھیترانی

  تحریر ۔ جان گل کھیتران بلوچ اردو ۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔ کھیترانی کیا حال ...

سیو اسٹوڈنٹس فیوچر کے نو منتخب وائس چیئرمین کی حلف برداری

سیو اسٹوڈنٹس فیوچر (ایس ایس ایف) کے نو منتخب وائس چیئرمین کی ...

error: Content is protected !!